روپوشی وجلادطنی کی زندگی گزار نے والے کارکنان کو معطل یا برطرف کرنے سے گریز کریں: سرکاری ، نیم سرکاری اورغیر سرکاری اداروں کے افسران سے بانی وقائد الطاف حسین کی اپیل

متحدہ قومی موومنٹ کے بانی و قائد جناب الطاف حسین نے تمام سرکار ی و غیر سرکاری اور نیم سرکاری اداروں کے افسران سے پر زور اپیل کی ہے کہ آپریشن کے دوران ایم کیوایم کے بہت سے کارکنان حق پرستانہ جدوجہد میں مجبوراً روپوشی وجلادطنی کی زندگی گزاررہے ہیں لہٰذا خدارا انہیں غیر حاضری کی بنا معطل یا برطرف کرنے سے اللہ رسول کے واسطہ گریز کریں ۔ انہوں نے کہا کہ جو کارکنان جلا وطنی کی زندگی گزارہے ہیں وہ کسی عیش وعشر ت کیلئے نہیں بلکہ غیر قانونی ونا جائز آپر یشن کی وجہ سے تحریک کی ہدایت پر روپو ش ہونے پر مجبور ہوئے ہیں ان کارکنان کی برطرفی کی وجہ سے ان کے گھر وں کے چولہے بجھ گئے ہیں جس کے باعث ان کے بچے فاقہ کشی پر ہیں، شدید بیماری کے باعث وہ علاج کی سہولت سے محروم ہیں حتیٰ کہ پینے کے صاف پانی تک کو ترس رہے ہیں ،جلاوطنی اورروپوشی کے سبب کارکنان نہ صرف کسمپر سی کی زندگی گزاررہے ہیں بلکہ اپنے بیوی بچوں اور اہل خانہ سے ملنے سے بھی قاصر ہیں ۔ جناب الطاف حسین نے کہا کہ میں جانتا ہوں کہ میں جو اپیل کر رہا ہوں اس پرعمل کرنا آپ کیلئے بہت رسکی RISKYہے لیکن جہاں تک آپ سے ممکن ہو سکے آپ مد د وتعاون کر سکتے ہیں وہ کریں میں آپ کا بے حد مشکورو ممنون ہو ں گا اور اللہ تعالی آپ کے تعاون ومد د پر آپ کے بچوں کا مدد گار ہوگا ۔ جناب الطاف حسین نے کہا کہ اتنا ضرور کہوں گا کہ حالات کے بہتری کے بعد یہ تمام کارکنان دوبار ہ اپنے اپنے ادروں میں فرض شناسی سے کام کریں گے لہٰذا میر ی آپ سے اپیل ہے کہ اپنا اثر و رسوخ استعمال کرتے ہوئے نوکری سے برطرف یا معطل کئے جانے والے کارکنان کی بحالی کیلئے بھر پور کوشش کریں ۔